Friday, January 21, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

تائیوان کے معاملےپرچین کی ڈکٹیشن قبول کرنے کے پابند نہیں : ٹرمپ

تائیوان کے معاملےپرچین کی ڈکٹیشن قبول کرنے کے پابند نہیں : ٹرمپ
December 12, 2016

واشنگٹن (ویب ڈیسک)امریکہ کے نومنتخب صدر ڈونلڈ ٹرمپ  نے اپنی توپوں کے دہانوں کا رخ  پھر چین کی جانب موڑ دیا کہتے ہیں بس بہت ہوگیا اب ون چائنہ پالیسی مزید نہیں چلے گی ٹرمپ کا کہنا تھا کہ وہ تائیوان کے معاملے پر چین کی   ڈکٹیشن قبول کرنے کے بھی پابند نہیں ہیں ، ٹرمپ نے اپنی   جیت میں روس کے کردار کی خبروں کو مضحکہ خیز قرار دیتے ہوئے یکسر مسترد کردیا۔

تفصیلات کےمطابق   ڈونلڈ ٹرمپ چین کو کوئی رعایت دینے  کو تیار نظر نہیں آتے ، پہلے تائیوانی صدر کو فون کرکے امریکہ کی سینتیس سالہ پالیسی کی دھجیاں بکھیریں اور اب ٹرمپ کا ایک ٹی وی انٹرویو میں کہنا تھا کہ وہ صدر کا منصب سنبھالنے کے بعد امریکی کانگریس سے ون چائنہ پالیسی پر نظر ثانی کرنے کا کہیں گے ، ٹرمپ کاکہنا تھا کہ وہ دن گئے جب چین تائیوان کے معاملے پر امریکہ کو ڈکٹیشن دیتا تھا ، انکاکہنا تھا کہ وہ تائیوان کے معاملے میں چین کی  کوئی بات سننے کو تیار نہیں۔

یہی نہیں  بلکہ وہ اس موقع پر سی آئی اے کو بھی لتاڑنے سے باز نہیں آئے ، کہتے ہیں انکی جیت میں روس کاکوئی کردار نہیں تھا ، ہم واضح اکثریت سے جیتے اور مخالفین کو اب یہ تسلیم کرلینا چاہیے۔ دوسری جانب چین نے ٹرمپ کے انٹرویو  پر شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے اسے اپنے اندرونی معاملات میں مداخلت  قرار دیا ہے ۔