Tuesday, January 25, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

بھارتی سپریم کورٹ نے ملک میں بیف کی تجارت پر پابندی کے مجوزہ قانون کو معطل کر دیا

بھارتی سپریم کورٹ نے ملک میں بیف کی تجارت پر پابندی کے مجوزہ قانون کو معطل کر دیا
July 11, 2017

نئی دہلی (ویب ڈیسک)بھارتی سپریم کورٹ نے ملک کی انتہا پسند ہندو تنظیموں کوبڑا جھٹکا دیدیا،عدالت عظمیٰ نے ملک میں بیف کی تجارت پر پابندی کے مجوزہ قانون کو معطل کر دیا۔

تفصیلات کےمطابق بھارت میں جب سے بی جے پی کی حکومت آئی  ملک میں مسلمانوں کیلئے زندگی تنگ ہوتی گئی۔ مذبح خانوں پر پابندیاں اور بیف کھانے پر عمر قید جیسی سزائیں سخت سزائیں تجویز کی گئیں جس کا جواز حکومت نے عدالت میں یہ پیش کیا کہ وہ اس قانون کے ذریعے ملک میں بیف کی غیر قانونی کاروبار کو روکنا چاہتی ہے۔

سپریم کورٹ کے جج نے اپنے حکم میں کہا کہ یہ قانون ملک میں گوشت اور چمڑے کی صنعت کو متاثر کرے گا جس سے لوگوں کا روزگار بھی متاثر ہوگا۔ سپریم کورٹ نے تامل ناڈو ہائی کورٹ کے حکم کو برقرار رکھتے ہوئے حکم دیا کہ یہ عدالتی حکم پورے ملک میں نافذ العمل ہوگا۔

انڈیا کے چیف جسٹس جگدیش سنگھ کھیہر نے اپنے فیصلے میں کہا کہ حکومتی فیصلے سے لوگوں کے روزگار پر ضرب نہیں لگنی چاہیے۔ انڈیا میں گوشت کے کاروبار سے جڑی ہوئی تنظیم آل انڈیا جمیعت القریش کے سربراہ عبد الفہیم قریشی نے اس فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہوئے اسے لوگوں کی فتح قرار دیا ہے۔ بھارت دنیا کا سب بڑا بیف ایکسپورٹر ہےاورسالانہ چار ارب ڈالر کی مالیت کا بیف ایکسپورٹ کرتا ہے۔