Friday, December 3, 2021
English News آج کا اخبار براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی
English News آج کا اخبار
براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی

ایل ڈی اے سٹی میں اربوں روپے کا ہیرپھیر جاری !!! منظوری کے بغیر پلاٹوں کی سیل کا انکشاف، شہریوں کی رقوم ڈوبنے کا خدشہ

ایل ڈی اے سٹی میں اربوں روپے کا ہیرپھیر جاری !!! منظوری کے بغیر پلاٹوں کی سیل کا انکشاف، شہریوں کی رقوم ڈوبنے کا خدشہ
July 28, 2015
لاہور (92نیوز) ڈائریکٹر جنرل لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی سرپرستی میں ایل ڈی اے سٹی کے نام پر ہاوسنگ سکیم میں اربوں روپے کے ہیر پھیر کا سلسلہ جاری ہے۔ متعلقہ محکموں کی منظوری کے بغیر ہی پلاٹوں کی سیل شروع کر دی گئی۔ شہریوں کی رقوم ڈوبنے کا خطرہ ہے۔ تفصیلات کے مطابق ایل ڈی اے سٹی کےلئے نو ہزار کینال زمین مختص کی گئی جسے بعد میں باسٹھ ہزار کینال تک پہنچا دیا گیا۔ منصوبے کا نہ تو کوئی ماسٹر پلان ہے اور نہ ڈیزائن، محکمہ ماحولیات سے اجازت بھی نہ لی گئی۔ ڈی جی ایل ڈی اے احد چیمہ منصوبے سے متعلق اپنے ہی بنائے گئے قواعد و ضوابط پر عمل درآمد کرانے میں ناکام ہو گئے۔ ذرائع کے مطابق ابھی تک منصوبے کےلئے صرف نوہزار کینال جگہ ہی حاصل کی گئی ہے جبکہ پچیس ہزار کینال تک زمین کی فائلیں فروخت کر دی گی ہیں۔ اربوں روپے لوگوں سے کس زمین کے عوض لیے گئے کوئی نہیں جانتا۔ دوسری جانب ڈی جی ایل ڈی اے احد چیمہ نے کمال مہربانی کرتے ہوئے پرائیوٹ ڈویلپرز کو ایل ڈی اے ہیڈ افس میں نہ جانے کس قانون کے تحت دفتر الاٹ کر دئیے۔ انہی پرائیویٹ ڈویلپرز نے کنسورشیم بنا کر ایل ڈی اے سٹی کی قیمتوں کو بھی کنٹرول کر لیا ہے جس میں آئے روز خود ساختہ اضافہ کر دیا جاتا ہے۔ ترجمان ایل ڈی اے سہیل جنجوعہ کہتے ہیں کہ کسی بھی سکیم کو شروع کرنے کیلئے انہیں کسی بھی محکمے سے اجازت نامے کی ضرورت نہیں جبکہ اپوزیشن لیڈر میاں محمودالرشید بھی ایل ڈی اے سٹی کو کرپشن کا گڑھ قرار دیتے ہیں۔ انہوں نے اس کیخلاف پنجاب اسمبلی میں تحریک استحقاق جمع کرانے کا بھی اعلان کیا ہے۔