Thursday, December 8, 2022

ایشیا اور افریقہ سمیت دنیا کی ایک تہائی آبادی کو زکا وائرس سے خطرہ لاحق ہے : ماہرین

ایشیا اور افریقہ سمیت دنیا کی ایک تہائی آبادی کو زکا وائرس سے خطرہ لاحق ہے : ماہرین
جنیوا (ویب ڈیسک) عالمی ماہرین صحت نے خبردار کیا ہے کہ زکا وائرس کے دوبارہ پھیلنے سے افریقا، ایشیا سمیت دنیا کی ایک تہائی آبادی کو خطرہ لاحق ہوسکتا ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے ایشیا کی آب وہوا بھی زکا مچھر کی افزائش کےلئے موزوں ہے۔ تفصیلات کے مطابق زکا وائرس دنیاکی ایک تہائی آبادی کو اپنی لپیٹ میں لے سکتاہے۔ ماہرین صحت نے سب کو خبردار کر دیا۔ ماہرین کا ماننا ہے کہ صر ف بھارت میں ایک اعشاریہ دو ارب افراد اس موذی وائرس کا شکار ہو سکتے ہیں جبکہ جنوبی امریکا اور کریبین کے ممالک کا ماحول بھی ان مچھروں کی پیدائش کیلئے موزوں ہے۔ ایشیا‘ بحرالکاہل اور افریقا ابھی تک تو زکا وائرس پھیلانے والے مچھروں سے محفوظ ہیں لیکن اگر ان علاقوں میں اس مچھر کی بہتات ہوئی تو دنیا کی ایک تہائی آبادی اس کی زد میں آجائےگی۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر وائرس حملہ آور ہوا تو صرف بھارت میں ایک اعشاریہ دو ارب افراد متاثر ہو سکتے ہیں۔ چین کے چوبیس کروڑ، انڈونیشیاکے انیس کروڑ، نائیجیریا کے سترہ کروڑ نوے لاکھ، پاکستان کے سولہ کروڑ اسی لاکھ اور بنگلہ دیش کے سولہ کروڑ افراد اس کی زد میں آ سکتے ہیں اور اگر ایسا ہوا تو یہ بہت خطرناک صورتحال ہو گی۔