Tuesday, January 25, 2022
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK) آج کا اخبار English News
English News آج کا اخبار
براہراست ٹی وی براہراست نشریات(UK)

ایبٹ آباد کمیشن کی رپورٹ سامنے لائی جائے: جسٹس(ر) جاوید اقبال

ایبٹ آباد کمیشن کی رپورٹ سامنے لائی جائے: جسٹس(ر) جاوید اقبال
December 19, 2016

اسلام آباد (92نیوز) ایبٹ آباد کمیشن کے سربراہ جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے کہا ہے کہ اسامہ بن لادن کے بارے میں بتا دیا تو پیچھے کچھ نہیں بچے گا۔ کمیشن نے ذمہ داروں کا تعین کر لیا تھا۔ کارروائی کرنا اور تفصیل بتانا حکومت کا کام ہے۔ انہوں نے ایبٹ آباد کمیشن کی رپورٹ منظرعام پر لانے کا مطالبہ کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق جسٹس ریٹائرڈ جاویداقبال کہتے ہیں کہ اگر ایبٹ آباد کمیشن کی سفارشات پر عمل ہوتا تو نئے اداروں کی ضرورت نہ پڑتی لیکن عمل درآمد کی بجائے کمیشن کی رپورٹ کو کسی الماری میں بند کر دیا گیا۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ ایبٹ باد کمیشن کی رپورٹ کو منظرعام پر لایا جائے۔

اسلام آباد میں سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ کے اجلاس میں لاپتہ افراد سے متعلق کمیشن کے چئیرمین جسٹس ریٹائرڈ جاویداقبال نے کہا کہ ایبٹ آباد کمیشن نے 6ماہ کام کیا۔ اگر اس کی سفارشات پرعمل کیا جاتا تو آج حالات مختلف ہوتے۔

جسٹس ریٹائرڈ جاویداقبال نے کہا کہ لاپتہ افراد کے حوالے سے سندھ کی صورتحال خراب ہے۔ ایک وقت ایسا تھا کہ ملک میں لاپتہ افراد کی تعداد 136 سے بڑھ کر 3692 تک جا پہنچی تھی۔ انہوں نے بتایا کہ اس سے متعلق کمیشن تیزی سے مقدمات کا فیصلہ کر رہا ہے اور اب صرف 1276 مقدمات کا فیصلہ باقی ہے۔

لاپتہ افراد سے متعلق کمیشن کے چئیرمین نے سینٹر رحمان ملک کی تعریف بھی کی اور کہا کہ رحمان ملک نے اس کمیشن کو نہ صرف مضبوط کیا بلکہ وسعت بھی دی اور اس پر وہ تعریف کے مستحق ہیں۔