Friday, December 3, 2021
English News آج کا اخبار براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی
English News آج کا اخبار
براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی

آکسفام نے بھارت کے اسپتالوں میں مسلمانوں کے ساتھ روا رکھے جانے والے سلوک پر سروے رپورٹ جاری کر دی

آکسفام نے بھارت کے اسپتالوں میں مسلمانوں کے ساتھ روا رکھے جانے والے سلوک پر سروے رپورٹ جاری کر دی
November 24, 2021 --- ویب ڈیسک

نئی دہلی (92 نیوز) آکسفام نے بھارت کے اسپتالوں میں مسلمانوں کے ساتھ روا رکھے جانے والے سلوک پر سروے رپورٹ جاری کر دی۔

مودی سرکار نے ملک کی 33 فیصد آبادی مسلمانوں کو اچھوت بنا کر رکھ دیا۔ آکسفام انڈیا نے دنیا کی سب سے بڑی نام نہاد جمہوریت کا پول کھول دیا۔

آکسفام انڈیا کے سروے کے مطابق بھارت میں 33 فیصد مسلمانوں کواسپتالوں میں امتیازی سلوک کو سامنا  ہے۔ 22 فیصد شیڈولڈ کاسٹس، 21 فیصد شیڈولڈ ٹرائبز اور 15 فیصد پسماندہ کلاسز کے افراد کو اسپتالوں میں تضحیک کا نشانہ بنایا جاتا ہے۔

آکسفام انڈیا سروے کی انچارج انجیلا تنیجا کا کہنا ہے اسپتالوں کا حال یہ ہے کہ یہاں  کہ میڈیکل پریکٹیشنرز بھی عام لوگوں کی طرح برتاو کرتے ہیں۔ یہاں تک کہ طبی عملہ دلت افراد کو ہاتھ تک نہیں لگاتا اور نہ ہی مریضوں کو بیماری کے حوالے سے بتاتا ہے۔

انجیلا تنیجا نے کہا کہ عالمی وبا کووڈ-19 کی ویکسی نیشن کیلئے مسلمانوں اور دلتوں کو کئی کئی بار سنٹرز پر جانا پڑتا ہے۔ حد تو یہ ہے کہ دس ہزار سے کم آمدنی والوں کو ابھی تک ویکسین کی ایک ڈوز بھی نہیں دی گئی۔