Tuesday, September 27, 2022

امریکی پولیس کی گولی سے ایک مسلمان شہری ہلاک، اسامہ رحیم نے سکیورٹی اہلکار پر چاقو سے حملہ کرنیکی کوشش کی: امریکی حکام

امریکی پولیس کی گولی سے ایک مسلمان شہری ہلاک، اسامہ رحیم نے سکیورٹی اہلکار پر چاقو سے حملہ کرنیکی کوشش کی: امریکی حکام
بوسٹن (ویب ڈیسک) امریکی پولیس نے ایک مسلمان شہری کو گولی مار کر ہلاک کر دیا ہے۔ اسامہ رحیم کی دہشت گردوں سے تعلق کے شبے میں نگرانی کی جا رہی تھی۔ فائرنگ کا واقعہ امریکی ریاست میسا چوسٹس کے شہر بوسٹن میں پیش آیا جہاں تین پولیس افسروں نے ایک مسلمان شہری اسامہ رحیم کو گولیاں مار کر ہلاک کر دیا۔ پولیس نے دعویٰ کیا ہے کہ اسامہ نے ایف بی آئی کے اہلکار پر چاقو سے حملہ کرنے کی کوشش کی جس پر اسے فائرنگ کر کے ہلاک کیا گیا۔ امریکا کے خفیہ ادارے کالعدم تنظیم دولت اسلامیہ سے روابط رکھنے کے شبے میں گزشتہ کچھ دنوں سے اسامہ رحیم کی نگرانی کر رہے تھے۔ اسامہ رحیم کا بھائی ابراہیم رحیم اوکلاہوما کی مسجد میں امام ہے۔ اس کا کہنا تھا کہ اسامہ رحیم کو کام سے گھر سے واپس آتے ہوئے بس اسٹیشن پر پیچھے سے تین گولیاں ماری گئیں۔