Tuesday, August 9, 2022

امریکا کے افغانستان سے انخلاء کے اثرات کا سامنا ہمیں کرنا پڑا، فواد چودھری

امریکا کے افغانستان سے انخلاء کے اثرات کا سامنا ہمیں کرنا پڑا، فواد چودھری
August 15, 2021 ویب ڈیسک

اسلام آباد (92 نیوز) وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری کہتے ہیں، امریکا نے افغانستان سے انخلاء کا فیصلہ کیا، یہ تمام فیصلے ہم سے پوچھ کر نہیں ہوئے لیکن ان کے اثرات کا ہمیں سامنا کرنا پڑا، ریاست مخالف بیانیہ کو بھارت سے سپورٹ ملی۔

فواد چودھری نے خطے کی موجود صورتحال پر گفتگو کرتے ہوئے کہا، ڈیجیٹل میڈیا ونگ کی رپورٹ میں پاکستان کو درپیش ہائبرڈ وار کی ایک جھلک پیش کی گئی ہے، ففتھ جنریشن وار اور ہائبرڈ وار ایک فلسفہ نہیں، ہمارے سامنے موجود ایک حقیقت ہے۔

اُنہوں نے کہا، امریکا آج دنیا کی سپر پاور اس لئے ہے کہ اس کے ہمسایہ میں امن ہے۔ پاکستان کی ایک جانب بھارت اور دوسری جانب افغانستان ہے۔ اس لحاظ سے ہمارے خطے کو کچھ مسائل درپیش ہیں۔ ہمیں اپنے زمینی حقائق کے مطابق فیصلے کرنا ہوتے ہیں۔

اُن کا کہنا تھا کہ، ہمیں اصل اور جعلی خبر میں فرق تلاش کرنے کا چیلنج درپیش ہے، کراچی میں جب ٹی ایل پی کے خلاف آپریشن شروع ہوا تو تین گھنٹوں کے دوران ہزاروں ٹویٹس ہوئے کہ وہاں سول وار شروع ہو گئی ہے۔ ان سارے فرقہ وارانہ فسادات کے پیچھے سب سے بڑا ہاتھ بھارت میں بیٹھے اینٹی پاکستان عناصر کا ہے۔

وزیر اطلاعات بولے کہ، جن ملکوں کے پاس بیانیہ نہ ہو، اکٹھا رہنے کا جواز نہ ہو اور دشمن ہر وقت تاک میں رہے تو اس کے لئے بیانیہ کی جنگ زیادہ اہمیت رکھتی ہے۔ فواد چودھری نے مزید کہا، ہم پاکستان میڈیا ڈویلپمنٹ اتھارٹی قائم کر رہے ہیں۔