Tuesday, December 7, 2021
English News آج کا اخبار براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی
English News آج کا اخبار
براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی

امریکا کو گولن یا ترکی میں سے کسی ایک کا انتخاب کرنا ہو گا : طیب اردگان

امریکا کو گولن یا ترکی میں سے کسی ایک کا انتخاب کرنا ہو گا : طیب اردگان
August 11, 2016
انقرہ (ویب ڈیسک) ترک صدر رجب طیب اردگان نے امریکا سے مذہبی سکالر فتح اللہ گولن کی حوالگی کا مطالبہ کرتے ہوئے واضح کر دیا ہے کہ امریکا کو گولن یا ترکی میں سے کسی ایک کا انتخاب کرنا ہو گا۔ تفصیلات کے مطابق انقرہ میں صدارتی محل کے باہر ریلی سے خطاب کرتے ہوئے ترک صدر رجب طیب اردگان کا کہنا تھا کہ ہم نے دستاویزات سے بھرے پچاسی باکس امریکا کے حوالے کر دیے ہیں۔ امریکا ایک دہشت گرد تنظیم یا جمہوری ملک ترکی میں سے کسی ایک کو چنے۔ ترکی میں حالیہ بم دھماکوں کے نتیجے میں تیرہ افراد کی ہلاکت پر ردعمل میں ترک صدر کا کہنا تھا کہ جب پی کے کے جان چھوڑتی ہے تو داعش جگہ لے لیتی ہے۔ ترک حکومت امریکا میں خود ساختہ جلاوطنی کی زندگی گزارنے والے مذہبی رہنما فتح اللہ گولن کو ناکام فوجی بغاوت کا ذمہ دار قرار دیتی ہے اور انہیں ترکی کے حوالے کرنے کا مطالبہ کر رہی ہے۔ واضح رہے کہ فتح اللہ گولن نے پندرہ جولائی کی پرتشدد بغاوت میں ملوث ہونے سے انکار کیا ہے۔