Monday, September 26, 2022

امریکا میں کوورنا سے ہلاکتوں میں پھر سے اضافہ ہونے لگا

امریکا میں کوورنا سے ہلاکتوں میں پھر سے اضافہ ہونے لگا
واشنگٹن (92 نیوز) کورونا وائرس امریکا میں پنجے گاڑے ہوئے ہے۔ مہلک وائرس سے ہلاکتوں میں ایک بار پھر سے اضافہ ہونے لگا ہے۔ گزشتہ چار دنوں سے روزانہ ایک ہزار سے زائد مریض قاتل وائرس سے جاں بحق ہو رہے ہیں۔ طبی ماہرین نے امریکا بھر میں لاک ڈاون کا مطالبہ کر دیا۔ امریکا میں کورونا وائرس ایک بار پھر سے زور پکڑنے لگا۔ گزشتہ چار روز سے یومیہ ہلاکتوں کی تعداد ایک ہزار تک جا پہنچی ہے۔ موزی وباء سے متاثرہ افراد کی ہلاکتوں میں اضافے کے بعد ایک بار پھر سے یہ بحث چھڑ چکی ہے کہ بچوں کو سکول بھیجنا چاہئے ہا نہیں۔ عوام شدید بے یقینی کا شکار ہے اور ملکی معیشت کی بگڑتی ہوئی حالت ان کی پریشانیوں میں مزید اضافہ کر رہی ہے۔ اسپتالوں میں مریضوں کی بڑھتی ہوئی تعداد اور کورونا ٹیسٹ میں تاخیر کے پیش نظر امریکی ریاست ہوسٹن اور لاس اینجلس کے میئر کا کہنا ہے کہ ملک میں ایک بار پھر سے لاک ڈاون کے نفاظ کی ضرورت ہے۔ ایک سو پچاس سے زائد طبی ماہرین، سائنسدان، نرسز اور دیگر ماہرین کی جانب سے ٹرمپ انتظامیہ کو لکھے گئے خط میں کورونا سے نمٹنے کیلئے سخت اقدامات پر زور دیا گیا ہے اور حکومت سے اپیل کی گئی ہے کہ اگر سخت احتیاطی تدابیر پر عمل نہ کیا گیا تو نومبر تک مہلک وائرس سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد دو لاکھ تک جا پہنچے گی۔