Wednesday, February 8, 2023

اقوام متحدہ نے اپنے فوجی مبصرین کی گاڑی پر بھارتی حملے کی تحقیقات شروع کر دیں

اقوام متحدہ نے اپنے فوجی مبصرین کی گاڑی پر بھارتی حملے کی تحقیقات شروع کر دیں

نیو یارک (92 نیوز) جنگی جنون بھارت کو مہنگا پڑ گیا۔ اقوام متحدہ نے اپنے فوجی مبصرین کی گاڑی پر بھارتی حملے کی تحقیقات شروع کر دیں۔

اقوام متحدہ سیکرٹری جنرل کے ترجمان نےاقوام متحدہ کی گاڑی سے نامعلوم شے ٹکرانے کی تصدیق کر دی ۔ اسٹیفن ڈوجیرک کا کہنا تھا کہ فوجی مبصر مشن تمام پہلوؤں سے تحقیقات کر رہا ہے۔

بھارتی قابض فورسز نے 18 دسمبر کو اقوام متحدہ اہلکاروں اور گاڑی پر حملہ کیا تھا۔ اقوام متحدہ فوجی مبصر مشن راولاکوٹ کے قریب اپنے معمول کا کام کر رہا تھا۔ پاک فوج نے اقوام متحدہ فوجی مبصرین کو تحفظ دیا اور راولاکوٹ پہنچایا۔

قبل ازیں پاکستان نے بھارت کے یو این فوجی مبصر مشن پر حملے کا معاملہ اقوام متحدہ کے سامنے اٹھا دیا تھا اور حملے کی تحقیقات کا مطالبہ کیا تھا۔ ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق اقوام متحدہ میں مستقل مندوب منیر اکرم کے پاکستان کی جانب سے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل، صدر سلامتی کونسل کے نام لکھے خط میں کہا تھا بھارتی قابض فورسز نے جان بوجھ کر اقوام متحدہ کے مبصرین اور گاڑی پر حملہ کیا۔ بھارتی حملے کا مقصد اقوام متحدہ فوجی مبصر مشن کو کام سے بزور طاقت روکنا ہے۔

خط میں کہا گیا تھا کہ بھارتی فورسز کا حملہ پاکستان پر مہم جوئی کی کوشش ہو سکتی ہے۔ بھارت داخلی مسائل اور مقبوضہ کشمیر سے دنیا کی توجہ ہٹانے کیلئے فالس فلیگ آپریشن کر سکتا ہے۔ کسی بھی مہم جوئی کی صورت میں پاکستان اپنے دفاع کا مکمل حق رکھتا ہے۔

خط میں مطالبہ کیا گیا تھا کہ اقوام متحدہ اپنے فوجی مبصرین پر حملے کی زبردست  مذمت کرے۔ اقوام متحدہ بھارت کو 2003ء کے فائر بندی انتظام پر عملدرآمد کروائے۔ اقوام متحدہ فوجی مبصر مشن کی مضبوطی کیلئے پاکستانی تجاویز پر مثبت ردعمل دے۔