Thursday, December 1, 2022

احسن کوپولیس کی گولی لگی، مقدمہ ہماری مرضی سے درج نہیں کیاگیا، والد احسن ‏

احسن کوپولیس کی گولی لگی، مقدمہ ہماری مرضی سے درج نہیں کیاگیا، والد احسن ‏

کراچی ( 92 نیوز) کراچی میں پولیس کی فائرنگ سے جاں بحق ہونے والے ڈیڑھ سالہ احسن کے والد نے کہا کہ وہاں کوئی  مقابلہ نہیں ہو رہا تھا ، بیٹا پولیس کی گولی لگنے سے جاں بحق ہوا۔

احسن کے والد کا کہنا تھا کہ مقدمہ ہماری مرضی سے درج نہیں کیا گیا ، ہمیں تھانے بلوایا گیا اور کہا گیا کہ ایف آئی آر پر دستخط کردیں  ، معلوم نہیں کیا لکھا گیاہے ۔

احسن کی والدہ کا کہنا تھا کہ  ہم رکشے میں بیٹھے تھے کہ دو موٹر سائیکلوں پر سوار چار پولیس والوں نے سیدھی رکشے پر فائرنگ کی جس سے میرا بیٹا دم توڑ گیا ۔

مشیر اطلاعت سندھ مرتضیٰ وہاب نے واقعے سے متعلق کہا کہ یہ چھٹا واقعہ ہے جس میں پولیس کی فائرنگ سےکسی معصوم کی جان گئی، سندھ حکومت بار بار  تنبیہ کرتی رہی ہے  کہ سندھ پولیس کا رویہ تبدیل کرنے کی ضرورت ہے۔

ادھر پی ٹی آئی کے رہنما اور ممبر سندھ اسمبلی خرم شیر زمان نے کہا کہ سندھ کے حالات بہت خراب ہو گئے ہیں ، سندھ پولیس کی تربیت نہیں کی گئی ۔

انہوں نے کہا کہ دو ماہ میں پانچواں واقعہ ہےجس میں پولیس کی فائرنگ سے  بچوں سمیت شہری جاں بحق ہو چکے ہیں ، شہر کے حالات بد ترین ہیں ۔