کوٹ لکھپت جیل کے باہر ٹرین روکنے پر لیگی کارکنوں کیخلاف مقدمہ درج ‏


کوٹ لکھپت
24 مارچ, 2019 10:11 دن

لاہور ( 92 نیوز ) لیگی کارکنوں کو کوٹ لکھپت جیل کے باہر ٹرین روکنا مہنگا پڑ گیا، پولیس کی جانب سے مقدمہ درج کر لیا گیا۔ مقدمہ لاہور پولیس کی مدعیت میں درج کیا گیا ہے ۔

کوٹ لکھپت جیل میں نوازشریف کےساتھ ملاقات کے نام پرطوفان بدتمیزی برپاکردیاگیا،مسلم لیگ ن کے کارکنوں نے ٹرین روک لی۔

جیل میں سزاکاٹنے والے نوازشریف سے صاحبزادی مریم نواز نے ملاقات کی اس دوران کوٹ لکھپت جیل کے مسلم لیگ ن کے کارکن آپے سے باہر  ہوگئے اوربیس منٹ تک ٹرین روکے رکھی۔

مشہورزمانہ گلو بٹ کے بھائی زاہدبٹ کی سربراہی میں کارکن ٹرین کے اوپرچڑھ گئے،پولیس بھی انہیں روکنے میں ناکام رہی۔

مریم نواز کی کوٹ لکھپت جیل آمدکے موقع پردھکم پیل بھی ہوئی جس سے کئی کارکن زخمی ہوگئے۔

جیل کے مین گیٹ پر  کارکنوں نے رکاوٹیں توڑدیں اور جیل کی جانب پیش قدمی شروع کردی۔ جیل انتظامیہ نے مریم نواز کوکارکنوں کے ساتھ آنے پر اندر جانے سے روک دیا ، جس پرمریم نواز نے کارکنوں کو واپس بھیجا۔

مریم نواز  اپنے والد نواز شریف سےملاقات کر کے جیل سے واپس چلی گئیں۔

تازہ ترین ویڈیوز