چوبیس ہزار ارب کا قرض کیسے چڑھا،وزیراعظم کا ہائی پاورڈ انکوائری کمیشن بنانیکا اعلان

ملک پر 24 ہزار ارب کا قرض کیسے چڑھا،وزیراعظم کا ہائی پاورڈ انکوائری کمیشن بنانیکا ‏اعلان
۱۲ جون, ۲۰۱۹ ۱:۰۰ شام

اسلام آباد ( 92 نیوز) ملک پر چوبیس ہزار ارب روپے کا قرضہ کیسےچڑھا، وزیر اعظم  نے ہائی پاورڈ انکوائری کمیشن بنانے کا اعلان کردیا ۔ کمیشن میں ایف بی آر،ایف آئی اے ، ایس ای سی پی،آئی ایس آئی سمیت دیگر اداروں کے نمائندے شامل ہوں گے۔

قوم سے اپنے خطاب میں وزیر اعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ ان کی جان بھی چلی جائے ، چوروں اور ڈاکوؤں کو نہیں چھوڑیں گے ، تحقیقات کریں گے کہ 10 سال میں کس طرح ملک کو تباہ کیا گیا، حکومت گرانے کی دھمکی دینے والے کسی اور کو بلیک میل کریں ۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ یہ مجھ سے سوال کرتے ہیں ، میں اب ان سے جواب مانگنے لگا ہوں ، اب تک پریشر تھا ملک کو مستحکم کرنے کا، اب اللہ کا کرم ہے پاکستان مستحکم ہو گیا ہے۔

عوام دشمن بجٹ قبول نہیں کریں گے ، بلاول بھٹو

وزیر اعظم نے کہا کہ پاکستانیوں کے 10 ارب ڈالرز بیرون ملک اکاؤنٹس میں پڑے ہیں ، اقامے منی لانڈرنگ کےطریقے تھے،ڈرائیور اور سکیورٹی گارڈ کے نام پر رقم منگوائی گئی ، زرداری نے ایک سوارب روپے کی منی لانڈرنگ کی،نیا پاکستان ریاست مدینہ کے اصولوں پر بنے گا، وہ بجٹ پیش کیا جو پاکستان کے نظریہ کی عکاسی کرتا ہے۔

عمران خان  نے قوم سے خطاب کے دوران ملک کی ترقی و خوشحالی کیلئے ریاست مدینہ کی مثال دی اور کہا کہ ریاست مدینہ میں  ہر کسی کوبرابری کے حقوق حاصل تھے اور غریبوں کی فلاح کیلئے کام کیے جاتے تھے ،جب یہ نظریہ پاکستان  میں آیا تو سب دیکھیں کے کہ یہ  ملک کیسے ترقی کرتا ہے،لیکن اس کیلئے محنت درکار ہے ۔

تازہ ترین ویڈیوز