پنو عاقل زہریلا کھانا کھانے سے باپ  تین بیٹوں سمیت  جاں بحق


پنو عاقل زہریلا کھانا باپ تین بیٹوں سمیت جاں بحق ‏92 نیوز سکھر
۰۶ اکتوبر, ۲۰۱۹ ۹:۲۲ شام

پنو عاقل ( 92 نیوز) سکھر کے علاقے پنو عاقل میں ایک افسوناک واقعہ پیش آیا ہے جہاں  زہریلا کھانا کھانے سے باپ اور تین بیٹے موت کے منہ میں چلے گئے۔۔چوتھے بچے  اور ماں کی حالت بھی تشویش ناک بتائی جاتی ہے ۔لواحقین نے سول اسپتال انتظامیہ پر علاج میں غفلت برتنے کا الزام عائد کیا ہے۔

مضر صحت کھانا یا پراسرار بیماری،پنوعاقل کے رہائشی باپ بیٹوں سمیت 4 افراد زندگی کی بازی ہار گئے، 2 روز قبل مبینہ طور پر زہر آلود کھانا کھانے سے اعجاز اندھڑ نامی شخص اور اس کے 4 بیٹے بیہوش ہوگئے۔جنہیں تشویشناک حالت میں سول اسپتال سکھر منتقل کیا گیا، دوران علاج اعجاز کے دو بیٹے 10 سالہ معین اور 16 سالہ مجیب دم توڑ گئے۔

سول اسپتال انتظامیہ نے گذشتہ رات والد سمیت 2 افراد کو بے ہوشی کی حالت میں کراچی ریفر کردیا، کراچی منتقلی کے دوران شیراز راستے میں جبکہ اعجاز اندھڑ کراچی کے جناح اسپتال میں زندگی کی بازی ہار گیا۔

سول اسپتال انتظامیہ کے مطابق پانچوں افراد کی اموات زہریلا کھانا کھانے کے باعث ہوئی ہیں جبکہ ورثاء نے اسپتال انتظامیہ پر مناسب علاج نہ ہونے کا الزام لگایا ہے ۔

چینل92 نیوز پر خبر نشر ہونے کے بعد صوبائی وزیر صحت عذرا افضل پیچوہو نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی ایچ او اور ایم ایس سول اسپتال پر مبنی 12 رکنی انکوائری ٹیم تشکیل دے کر ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسرسے 24 گھنٹوں کے اندر رپورٹ طلب کرلی ہے۔

ورثا کے مطابق متوفی اعجاز کے کی اہلیہ کے ساتھ ایک اور بیٹے کی حالت بھی غیر ہو گئی ہے  ، متوفی اعجاز اندھڑ اور ان کے تینوں بیٹوں کی ہلاکت مضر صحت کھانا کھانے سے ہوئی ہے یا سول اسپتال انتظامیہ کی نااہلی سے، حقائق سے پردہ انکوائری رپورٹ آنے کے بعد ہی اٹھ سکے گا۔

تازہ ترین ویڈیوز