وزیراعلیٰ سندھ نے ارشاد رنجھانی قتل کا نوٹس لے لیا

۰۹ فروری, ۲۰۱۹ ۸:۱۲ شام

کراچی ( 92 نیوز ) وزیراعلی سندھ نے ارشاد رنجھانی قتل  کا نوٹس لے لیا اور معاملے پر جوڈیشل انکوائری کا فیصلہ کیا۔

کراچی کی بھینس کالونی میں شہری کے ہاتھوں مبینہ ڈاکو کی ہلاکت کے معاملے پر سندھ سرکار متحرک ہو گئی ، ارشاد رنجھانی ڈاکو تھا یا عام شہری ، عدالتی تحقیقات کرائی جائیں گی ۔

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے کہا کہ  عام شہری کا خون  کسی صورت معاف نہیں کر سکتے  ۔ وزیر اعلیٰ سندھ نے آئی جی کو تحقیقات کا حکم دیا جس پر ڈی آئی جی ایسٹ عامر فاروقی کی سربراہی میں تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ۔

تحقیقاتی کمیٹی نے دو عینی شاہدین  اور فائرنگ کرنے والے شہری رحیم شاہ کا بیان قلمبند کر لیا،عینی شاہدین کے مطابق ارشاد رنجھانی زخمی ہونے کے بعد اسپتال لے جانے کے لئے مدد مانگتا رہا ، پولیس آدھ گھنٹے بعد  زخمی کو اسپتال لے کر گئی ۔

فائرنگ کرنے والے شہری رحیم شاہ کا کہنا ہے کہ ارشاد رنجھانی نے لوٹ مار کی کوشش کی تو اپنے دفاع میں فائرنگ کر دی۔

تازہ ترین ویڈیوز