وزارت صحت کا کریک ڈاؤن ، جعلی اور غیر رجسٹرڈ ادویات کا اسٹاک برآمد

۱۲ نومبر, ۲۰۱۹ ۱۱:۳۵ دن

اسلام آباد ( 92 نیوز) وزارت صحت کا ملک بھر میں کریک ڈاؤن ہے ، جس میں  جعلی اور غیر رجسٹرڈ ادویات کا اسٹاک برآمد کیا گیا ،  زائد قیمتیں وصول کرنے پر کمپنی بھی سیل کر دی گئی ۔ معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا کا کہنا ہے کہ غیر قانونی ادویات کی فروخت و ترسیل کے ذمہ داران کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔

وزارت صحت  کی ہدایت پر ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی ایکشن میں آگئی  اور  ملک کے مختلف حصوں میں کریک ڈاؤن شروع کر دیا۔ ترجمان وزارت صحت کے مطابق ڈرک ریگولیٹری اتھارٹی کی ٹیم نے حسن ابدال  میں بڑی کارروائی کی پریمیر ایجنسی پر چھاپہ مارا اور منظور شدہ قیمت سے زائد وصول کرنے پر ادویات کا سٹاک قبضے میں لے لیا۔

وزارت صحت کے مطابق فیڈرل اور صوبائی ڈرگ انسپکٹرز نے ملتان میں مشترکہ کارروائی کی  جہاں  فضل اور حسن میڈیسن کمپنی کو زاید قیمت وصول کرنے پر  سیل کر دیا ، ریووٹرل 5mg کی ڈبی 165 کی بجائے 380 روپے ، جبکہ ریووٹرل 2mg کی ڈبی 240  کی بجائے 580 روپے کی فروخت ہو رہی تھی۔پشاور میں فیڈرل ڈرگ انسپکٹر نے چارسدہ روڈ پر غیر قانونی ادویات کا  سٹاک قبضے میں لے لیا۔

معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا نے  ملک کو غیر معیاری جعلی اور ان رجسٹرڈ ادویات سے پاک کرنے کے عزم کا اظہار  کیا اور کہا کہ  غیر قانونی ادویات کی فروخت و ترسیل کے ذمہ داران کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی  ، جبکہ منظور شدہ ریٹ سے زائد وصولی کسی صورت برداشت نہیں ، ایسا کرنے والوں کو سخت سزائیں اور بھاری جرمانے کیے جائیں  گے۔

تازہ ترین ویڈیوز