Thursday, January 28, 2021
٩٢ نیوز انگلش آج کا اخبار براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی
٩٢ نیوز انگلش آج کا اخبار
براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی

نواز شریف وہی بولتے ہیں جو ان کے آقا لکھ کر دیتے ہیں، فیاض الحسن چوہان

نواز شریف وہی بولتے ہیں جو ان کے آقا لکھ کر دیتے ہیں، فیاض الحسن چوہان
October 3, 2020

لاہور ( 92 نیوز) وزیر اطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہان کا کہنا ہے کہ نواز شریف وہی بولتے ہیں جو ان کے آقا انہیں لکھ کر دیتے ہیں ،اے پی سی میں نوازشریف کے ساتھ ہاتھ ہوا،آصف زرداری اور مولانا فضل الرحمٰن نے میٹھی میٹھی باتیں کیں،انہوں نے نوازشریف کو آگے کردیا،ان کو پتہ تھا کہ نوازشریف اپنا نقصان کریں گے ۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے فیاض الحسن چوہان کا کہنا تھا کہ پاکستان ڈیمولشن موومنٹ والے سیاست کررہے ہیں لیکن صرف ن اور ش لیگ تک ،زرداری چپ ہوگئے،بلاول باہر چلے گئے،مولانا گھومنے پھرنے چلے گئے،یہ لوگ ن لیگ کو منجدھار میں چھوڑ کر چلے گئے۔

فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ شہبازشریف نے اپنی ضمانت قبل ازگرفتاری کی درخواست خود واپس لی ، وہ  ن لیگ  کی پالیسیوں سے تنگ آچکے تھے ،شہبازشریف نے ن لیگ کو بہت سمجھایا ،ن لیگ وفاق،پنجاب کے صدور سب چپ ہیں،انہوں نے قسم کھا لی ہے جو کرنا ہے کرلو ہمارا کچھ لینا دینا نہیں۔

وزیر اطلاعات پنجاب کا کہنا تھا کہ  2018 کے الیکشن میں دھاندلی کا کہنے والے  وہ لوگ ہیں جو مسترد شدہ ، نظر انداز اور نا اہل ہیں ، 2013کے الیکشن میں دھاندلی کی  410 رٹ پٹیشنز ہوئیں ،وہ دنیا کی تاریخ کا سب سے دھاندلی زدہ الیکشن تھا ،ہم نے پہلے دوسال ان کی حکومت کےراستے میں کوئی رکاوٹ نہیں ڈالی ، تحریک انصاف کی جانب سے نشاندہی کیے گئے چاروں حلقوں میں دھاندلی ثابت ہوئی ، اسی ایک حلقے سے سلطان مفرور الدین وزیراعظم تھے۔

 فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ عوام نے پی ٹی آئی اور عمران خان کو آنکھوں پر بٹھا کر وزیراعظم بنایا،سب جانتے ہیں 80کی دہائی میں ایٹم بم بن چکا تھا، ایٹم بم کے موجد ڈاکٹر عبدالقدیر کے بیسیوں انٹرویو موجود ہیں،ڈاکٹرقدیر نے کہا نوازشریف ایٹمی دھماکوں پر تیار نہیں تھے، ایٹمی دھماکا نہ کرنے پر قاضی حسین احمد نے ملین مارچ کیے تھے ، عوام نے بھی نوازشریف پر ایٹمی دھماکوں کےلیے دباؤ ڈالا، نوازشریف نے ایٹمی دھماکے مجبوری میں کیے ،کروز میزائل سےمتعلق ڈاکٹر ثمرمبارک مند نے ان کے منہ پر  ہے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ نوازشریف کو عدالتوں نے ریلیف دیا،ہم نے رکاوٹ نہیں ڈالی،شہبازشریف نے ضمانت دی لیکن مکر گئے ،انہیں  علاج کےلیے بھیجا گیا ، وہ خود واپس آجائیں ، نوازشریف جن شرائط پر گئے ان پر عمل نہیں کررہے، یاد رکھیں انہیں این آر او کبھی نہیں ملے گا۔

وزیر اطلاعات پنجاب کا کہنا تھا کہ نواز شریف نے مولانا کو چکمہ دیا تھا ، اب مولانا پکنک منانے نکل گئے ہیں ،آصف زرداری اور بلاول زرداری بھی ان کےساتھ نہیں آئیں گے ، نوازشریف نے کھل کر تقریر کی،ن اور ش لیگ کا سب کچھ بند کردیا۔