موبائل کارڈ کے سو روپے لوڈ کرنے پر پورے سو روپے کا بیلنس ملنا شروع

۱۴ جون, ۲۰۱۸ ۹:۵۰ دن

اسلام آباد (92 نیوز) موبائل صارفین کو عید سے پہلے عیدی مل گئی ۔ سپریم کورٹ کے حکم پر موبائل کارڈ کے سو روپے لوڈ کرنے پر پورے سو روپے کا بیلنس ملنا شروع ہو گیا ۔

موبائل صارفین کے لیے بڑی خوشخبری آگئی ۔ موبائل کمپنیوں نے چیف جسٹس آف پاکستان کے حکم پر موبائل کارڈ پر کٹنے والا ٹیکس ختم کر دیا گیا ۔  سو روپے کے لوڈ پر صارف کو اب پورے سو روپے کا بیلنس ملنا شروع ہو گیا لیکن صارفین کی یہ خوشی صرف محدود مدت کے لیے ہے ۔

ایف بی آر ذرائع کے مطابق صارفین کو موبائل کمپنیوں کی طرف سے یہ ریلیف صرف 15 دن کے لیے دیا گیا ہے ۔

اس سےقبل سو روپے کے موبائل کارڈ پرٹیکس کٹوتی کے بعد صارف کو صرف چونسٹھ روپے اٹھائیس پیسے ملا کرتے تھے جس پر چیف جسٹس آف پاکستان نے از خود نوٹس لیا تھا ۔

قبل ازیںچیف جسٹس آف پاکستان میاں ثاقب نثار نے موبائل کمپنیز اور ایف بی آر کی جانب سے موبائل کارڈز پر وصول کیے جانیوالے ٹیکسز معطل کر دئیے ۔

چیئرمین ایف بی آر نے عدالت کو بتایا کہ کمپنیاں اپنے طور پر سروس چارجز وصول کر رہی ہیں۔

اس پر چیف جسٹس نے سخت برہمی کا اظہار کیا اورموبائل فون کارڈ پر کمپنیوں اور ایف بی آر کے ٹیکسز معطل کر دیئے۔

سپریم کورٹ نے ریمارکس دئیے کہ لوگوں سے لوٹ مار کی جارہی ہے،مقررہ حد سے زیادہ استعمال پر ٹیکس وصول کریں۔

عدالت نے کہا کہ 100 روپے پر 64.38 پیسے وصول ہوتے ہیں،جو غیر قانونی ہے، موبائل فون کارڈر پر ٹیکس وصولی کیلئے جامع پالیسی بنائی جائے۔

تازہ ترین ویڈیوز

Oops, something went wrong.