مقبوضہ کشمیر کا خصوصی درجہ ختم کرنے پر بھارت کے خلاف قرارداد منظور

مقبوضہ کشمیر خصوصی درجہ ختم بھارت قرارداد منظور
۰۷ اگست, ۲۰۱۹ ۷:۵۹ شام

 اسلام آباد (92 نیوز) پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس نے مقبوضہ کشمیر کا خصوصی درجہ ختم کرنے پر بھارت کے خلاف قرارداد متفقہ طور پر منظور کر لی۔

چئیرمین پارلیمانی کشمیر کمیٹی فخر امام نے بھارتی اقدامات اور جارحیت کے خلاف قرارداد پیش کی ۔

قرارداد کے متن کے مطابق پارلیمنٹ نے مقبوضہ کشمیر کا سٹیٹس تبدیل کرنے کے بھارتی اقدام کی مذمت کردی ۔ قرارداد پر تمام پارلیمانی جماعتوں کے رہنماؤں کے دستخط ہیں ۔ مسئلہ کشمیر کے تین فریق ہیں ۔ پاکستان، بھارت اور کشمیری۔ مسئلہ کشمیر اقوامِ متحدہ کی قرارداد وں اور کشمیری عوام کی خواہشات کے مطابق حل کیا جائے۔

قرارداد کے مطابق بھارت کی طرف سے جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی اور سویلین ابادی پر کلستڑ بم استعمال کرنے کی بھی مذمت کی گئی۔ کشمیریوں کے حق خود ارادیت کی مکمل حمایت کا اعادہ اور بھارت سے انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں ، غیر قانونی اقدامات ختم کرنے اور کشمیری قیادت کو فوری رہا کرنے کا مطالبہ کیا گیا۔

قرارداد میں کہا گیا مسئلہ کشمیر کا کوئی یک طرفہ حل قبول نہیں ہے۔ کشمیر عالمی سطح پر متنازعہ علاقہ ہے۔ عالمی برادری بھارت کو مقبوضہ کشمیر بارے کوئی بھی یک طرفہ فیصلہ لینے سے روکے۔

تازہ ترین ویڈیوز