مقبوضہ کشمیر میں بدترین کرفیو کا 47 واں روز، چپے چپے پر بھارتی فوج تعینات

مقبوضہ کشمیر ، کرفیو ، 55 روز ، 80 لاکھ ، کشمیری ، گھروں ، محصور
۲۰ ستمبر, ۲۰۱۹ ۱۲:۰۶ شام

سری نگر (92 نیوز) مقبوضہ کشمیر میں بدترین کرفیو کو 47 روز ہو گئے، انسانی بحران شدید تر ہو گیا، چپے چپے پر بھارتی فوجی تعینات ہیں، لاکھوں کشمیری اپنے ہی گھروں میں محصور ہو کر رہ گئے۔

مسلسل لاک ڈائون نے کشمیری معیشت کو اربوں کا نقصان پہنچایا ہے، مارکیٹیں اور کاروباری مراکز بند پڑے ہیں۔ سکولوں کے بند رہنے سے بچوں کا تعلیمی مستقبل خطرے میں پڑ گیا ہے۔

مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کے بعد ہزاروں کشمیریوں کو قید کیا گیا، جن میں سے کئی ہزار بھارتی جیلوں میں قید ہیں۔ انہی میں سے ایک آگرہ جیل بھی ہے۔

بی بی سی کے مطابق قیدیوں سے ملنے کیلئے آنے والے رشتہ داروں کو انتظار کیلئے ایسے کمرے میں بٹھایا جاتا ہے ، جہاں بدبو اور غلاظت کے ڈیرے ہیں ، جس کمرے میں چند لمحے گزارنا بھی ناممکن ہے،، وہاں بے بس رشتہ دار،، ملاقات ہونے یا نہ ہونے کی کشمکش میں،، گھنٹوں تک انتظار کی سولی پر لٹکے رہتے ہیں۔۔

دوسری جانب مقبوضہ وادی میں مواصلاتی بلیک آئوٹ بدستور جاری ہے، لاکھوں لوگ اپنے پیاروں کی آواز سننے کو ترس گئے ہیں۔

تازہ ترین ویڈیوز