Friday, June 18, 2021
٩٢ نیوز انگلش آج کا اخبار براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی
٩٢ نیوز انگلش آج کا اخبار
براہراست نشریات(UK) براہراست ٹی وی

قومی اسمبلی میں عالمی عدالت انصاف بل 2020 کثرت رائے سے منظور

قومی اسمبلی میں عالمی عدالت انصاف بل 2020 کثرت رائے سے منظور
June 10, 2021

اسلام آباد (92 نیوز) قومی اسمبلی میں عالمی عدالت انصاف (نظر ثانی و غور) بل 2020 کثرت رائے سے منظور کرلیا گیا۔

اب غیر ملکیوں کو فوجی عدالتوں کی سزا کے خلاف ہائیکورٹ میں اپیل کا حق حاصل ہو گا۔ بھارتی جاسوس کلبھوشن جادیو کو بھی اپیل کا حق ملے گا۔

بلاول بھٹو زرداری نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ کلبھوشن جادیو کو این آر او دینے کے بلوں کو زبردستی منظور کرایا گیا۔ کشمیر کے وکیل کلبھوشن کے وکیل بن گئے، کلبھوشن کو این آراو دینا ہی تھا تو آرڈیننس سے کیسے دیا؟۔

بل کی منظوری کے خلاف اپوزیشن نے پورا ایوان سر پر اٹھا لیا، ہنگامہ آرائی اور اسپیکر ڈائس کا گھیراؤ کیا، ایوان نعروں سے گونج اٹھا۔

وزیر قانون فروغ نسیم کا کہنا تھا کہ کلبھوشن کو (ن) لیگ کے دور میں قونصلر رسائی نہیں دی گئی، عالمی عدالت انصاف نے واضح طور پر اپیل کا قانون لانے کا کہا ہے، اگر بل پاس نہ ہوتا تو بھارت عالمی عدالت انصاف میں توہین کا مقدمہ درج کراتا۔

فروغ نسیم نے مزید کہا کہ یہ وہ قانون ہے جو اپوزیشن کو پاکستان کے مفاد میں مل کر منظور کرانا چاہیے تھا لیکن اپوزیشن نے بھارتی مقاصد پورے کرنے کی کوشش کی۔

قومی اسمبلی میں مالیاتی ادارے ترمیمی بل کثرت رائے سے منظور کرلیا گیا۔ بل کے حق میں 112 جبکہ مخالفت میں 101 ووٹ آئے۔ بابر اعوان نے اپوزیشن کے احتجاج کے دوران انتخابات ترمیمی بل 2020 پیش کردیا گیا۔