صدارتی نظام ملک کے مفاد میں نہیں، بلاول بھٹو

صدارتی نظام ،ملک، مفاد ، بلاول بھٹو
۲۶ اپریل, ۲۰۱۹ ۱۰:۰۲ شام

اسلام آباد (92 نیوز) چیئرمین پی پی پی بلاول بھٹو کا کہنا ہے کہ صدارتی نظام ملک کے مفاد میں نہیں اور تمام جمہوری قوتیں اس کی مخالفت کریں گی۔

اپوزیشن رہنماؤں کے ساتھ اسلام آباد میں گفتگو کرتے ہوئے کہا جمہوریت کےخلاف سازشیں ناکام بنائیں گے۔صدارتی نظام ملک کےمفاد میں نہیں ۔

بلاول بھٹو نے اپنی بات دہراتے ہوئے کہا۔ جمہوری نظام میں عوام کی مرضی چلتی ہے۔کسی امپائر کی نہیں۔ جمہوریت میں فیصلے عوام ہی کرتے ہیں۔ کہا تھرڈ امپائر کی نہیں، عوام کی مرضی چلتی ہے

اُن کا کہنا تھا کہ نیب پولیٹیکل انجینئرنگ کیلئے بنایا گیا، حکومت یقین دلائے کہ سی پیک پر کوئی سمجھوتہ نہیں کرے گی

چیئرمین پیپلزپارٹی نے کہا کہ سلیکٹڈ وزیراعظم سے پوچھنا ہے کہ کیا ایمپائر کو تبدیلی پسند آئی؟ ملک میں ایک ہی امپائر ہے اور وہ عوام ہیں۔

قبل ازیں پیپلز پارٹی اور نون لیگ کا جمہوریت، 18ویں ترمیم اور انسانی حقوق کے تحفظ کیلئے مل کر کام کرنے پر اتفاق کیا۔

تازہ ترین ویڈیوز