سماجی کارکن شہلا رشید نے کشمیریوں پر بیتنے والے مظالم بیان کر دیے

سماجی کارکن ‏ شہلا رشید ‏ مظالم ‏ سرینگر ‏92 نیوز بھارتی فورسز ‏ نظر بند ‏ بدترین تشدد ‏ بلیک آؤٹ ‏
۱۸ اگست, ۲۰۱۹ ۹:۳۰ شام

سرینگر( 92 نیوز)  بھارتی فورسز گھروں میں نظر بند بیگناہ کشمیریوں کو  بھی بدترین تشدد کا نشانہ بنارہی ہیں،میڈیا کا بلیک آؤٹ بھی اندرونی کہانی کوباہر آنے سے نہ روک سکا۔مقبوضہ کشمیر کی سماجی کارکن شہلا رشید نےکشمیریوں پربیتنے والے مظالم بیان کر دیے ۔

سرینگرسمیت وادی میں کہیں نقل وحرکت کی اجازت نہیں ہے، مقامی اخباروں پر بھی پابندی ہے، کشمیری سماجی کارکن شہلا رشید نے وادی سے آنے والوں کی زبانی وہاں کی اندرونی کہانی بیان کردی۔

شہلا رشید نے بھارتی بربریت بیان کرتے ہوئے لکھا کہ  قابض فورسز رات کے اندھیرے میں گھروں میں داخل ہوتی ہیں،لڑکوں کو حراست میں لیتی ہیں، گھروں میں توڑ پھوڑ کرتی ہیں اور کھانے پینے کی اشیا کو بھی ضائع کردیتی ہیں۔

شہلا رشید نے شوپیاں میں پیش آنے والے ہولناک واقعہ کی منظر کشی کرتے ہوئے لکھا کہ بھارتی فورسز نے چار کشمیریوں کو بدترین تشدد کا نشانہ بنایا۔تشدد کے دوران مائیک بھی ساتھ رکھا اور تکلیف سےکراہتے نوجوانوں کی چیخیں اسپیکر پر پورے علاقے میں بھی سناتے رہے۔

شہلا رشید نے مزید لکھا کہ  وادی میں اشیائے خور و نوش کی شدید قلت پیدا ہوچکی ہے،بچوں کو خوراک میسر ہے نہ بیماروں کیلئے ادویات۔

تازہ ترین ویڈیوز