سانحہ چکرا گوٹھ کیس، چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ آئی جی سندھ پر برہم


سانحہ چکرا گوٹھ
۲۳ جنوری, ۲۰۱۹ ۴:۲۳ شام

کراچی  ( 92 نیوز) کراچی میں سانحہ چکرا گوٹھ کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نے آئی جی کلیم امام پر شدید برہمی کا اظہار کیا۔

سانحہ چکرا گوٹھ کیس میں 7 پولیس اہلکاروں کے قتل کیس  میں  گواہ پیش نہ کرنے پر چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ پولیس حکام پر برہم  ہو گئے ۔

عدالت نے  ریمارکس میں کہا کہ پولیس حکام اپنے اہلکاروں کے قتل کیس میں  گواہ پیش نہیں کرسکے، کسی اور کو کیا انصاف دلائیں گے ۔

چیف جسٹس نے آئی جی سندھ سے شہید اور زخمی اہلکاروں کی تعداد کا پوچھا ،  سید کلیم امام نے بتایا کہ واقعے میں 5 جوان شہید ہوئے تھے ۔آئی جی سندھ زخمیوں کی تعدادنہیں بتاسکے ۔

جس پر چیف جسٹس نے کہا افسوس کی بات ہے  آپ کو زخمیوں کی تعداد معلوم نہیں   ۔ آئی جی صاحب آپ بھی وہی وردی پہنتے ہیں جو دوسرے اہلکار پہنتے ہیں ۔

عدالت نے تمام گواہوں کو ٹرائل کورٹ میں پیش ہونے کا حکم دیتے ہوئے

سماعت 20جنوری تک ملتوی کردی ۔

تازہ ترین ویڈیوز