جمعیت علمائے اسلام ف کا آزادی مارچ 14ویں روز میں داخل

جمعیت علمائے اسلام ف ‏ آزادی مارچ ‏ اسلام آباد ‏ ‏92 نیوز چاق و چوبند
۱۳ نومبر, ۲۰۱۹ ۳:۳۰ شام

اسلام آباد ( 92 نیوز) جمعیت علمائے اسلام ف کا آزادی مارچ 14ویں روز میں داخل ہو گیا ، شرکاء سستی بھگانے اورخود کو چاق و چوبند رکھنے کيلئے مختلف کھیل کھيلتے رہے ، جلسہ گاہ میں ناقص کھانا فراہم کیے جانے کا بھی انکشاف ہوا ہے ۔

جمعیت علمائے اسلام ف نے پلان بی پر عملدرآمد شروع کردیا ، 14 روز سے پشاور موڑ پر جاری آزادی مارچ جاری رکھنا ہے یا ختم کرنا ہے ، قائدین نے مولانا فضل الرحمان کے گھر پر بیٹھک لگادی ۔

اسلام آباد ميں دھرنا شرکاء بھی قائدین کے حکم کے منتظر ہیں جنہوں نے ناشتےکے فورا بعد پنڈال اوراطراف کو صاف کیا خود کو چاق و چوبند رکھنے کيلئے مختلف کھیل کھیلے ،جلسہ گاہ میں حجام کی دکانیں بھی کھل گئیں ۔

دھرنے سے نمٹنے کیلئے شہر اقتدار میں بلائی گئی پولیس کے مسائل میں بھی اضافہ ہونے لگا ، پولیس اہلکاروں کو ناقص کھانا فراہم کیے جانے کا انکشاف ہوا ہے جس سے 100 سے زائد پولیس اہلکار پیٹ کی بیماریوں میں مبتلا  ہو گئے ،

میڈیکل کی سہولیات سے محروم اہلکاروں نے جب اعلیٰ حکام کو  فرسٹ ایڈ باکس ، واش رومز کی عدم سہولت بارے شکایات کی تو الٹا سخت ایکشن کی دھمکیاں ملیں، چھٹی نہ ملنے پر سوات پولیس کا اہلکار خودکشی کی کوشش بھی کرچکا ہے۔

تازہ ترین ویڈیوز