جج کی ویڈیو بنا کر بلیک میل کرنے والا میاں طارق پیپلزپارٹی کی اہم شخصیت کا فرنٹ مین نکلا

۱۴ جولائی, ۲۰۱۹ ۹:۴۶ دن

 اسلام آباد (92 نیوز) جج کی ویڈیو بنا کر بلیک میل کرنے والا میاں طارق پیپلزپارٹی کی اہم شخصیت کا فرنٹ مین اور منشیات کے دھندے میں ملوث نکلا۔

جج ارشد ملک کی ویڈیو  نے ملکی سیاست میں ہلچل مچا دی۔ کہانی ناصر بٹ سے ہوتی ہوئی مہر جیلانی، میاں طارق، ناصر جنجوعہ اور خرم یوسف تک جا پہنچی اور احتساب عدالت نمبر 2 پر جا کر رکی۔ جج ارشد ملک کی جانب سے بیان حلفی میں انکشاف کردہ کرداروں سے متعلق معلومات سامنےآگئیں۔

ویڈیو اسکینڈل کا ایک کردار خرم یوسف بھی ہے۔ بیان حلفی کے مطابق خرم یوسف وسط فروری میں ہونے والی ملاقات میں موجود تھا جب مسلم لیگ ن برطانیہ کے نائب صدر ناصر بٹ نے ارشد ملک کے سامنے ملتان والی ویڈیو کا ذکر کیا۔

خرم یوسف ناصر بٹ کا بزنس پارٹنر اور بحریہ ٹاؤن کا رہائشی ہے۔ ناصر بٹ کے ساتھ مل کر پاکستان میں ریئل اسٹیٹ کا کاروبار کرتا ہے۔ اسلام آباد کے سیکٹر جی تیرہ میں لائف اسٹائل پراجیکٹ بھی اسی کی ملکیت ہے۔

جج ارشد ملک کی ویڈیو ن لیگ کو فروخت کرنے والے میاں طارق کا تعلق منشیات فروش گروہ سے نکلا۔ میاں طارق کا بھائی میاں ادریس منشیات کے مقدمے میں گرفتار بھی رہ چکا ہے۔

اسی مقدمے کے بعد جج ارشد ملک کی ویڈیو بنائی تھی۔ ویڈیو 2017 میں ایک گاڑی اور 5 کروڑ روپے کے بدلے فروخت کی گئی۔

تازہ ترین ویڈیوز