بلاول بھٹو زرداری کی خورشید شاہ کی گرفتاری کی شدید مذمت


18 ستمبر, 2019 11:58 شام

 اسلام آباد (92 نیوز) پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے خورشید شاہ کی گرفتاری کی شدید مذمت کی۔

بلاول بھٹو زرداری نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا سابق اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ کو نیب نے گرفتار کر لیا۔ ہم خورشید شاہ کی گرفتاری کی شدید مذمت کرتے ہیں۔ نیب کا ادارہ مشرف دور سے ہی پولیٹیکل انجینئرنگ کیلئے استعمال ہوا ہے۔ ہم عید کے موقع پر نماز آزاد کشمیرمیں پڑھنا چاہتے تھے۔ اس موقع پر فریال تالپور کو گرفتار کر لیا گیا۔ سیاسی جماعتوں کے متحد ہونے کی ضرورت ہے۔

پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین کا کہنا تھا حکومت کی پالیسیاں انتقامی ہیں۔ کشمیر کے ایشو پر سب متحد ہیں۔ پوری عوام کشمیریوں کے ساتھ ہیں۔ نااہل وزیراعظم کی وجہ سے کشمیر کے ایشو کو نقصان ہو رہا ہے۔ اپنے ہی ملک میں انسانی حقوق کی دھجیاں اڑائی جارہی ہیں۔ انہوں نے کہا ایسی صورتحال میں کشمیریوں کیلئے کیسے آواز بلند کر سکیں گے۔ ہمیں ایک ہونے کی ضرورت تھی لیکن افسوس ہے کہ ایسا نہیں ہے۔ ہم حکومت اور اس کے سہولت کاروں کو ڈیڈلائن دے چکے ہیں۔

بلاول بھٹو زرداری نے کہا نالائق حکومت کے 3 بجٹ آچکے اور اس میں غریب کیلئے تکلیف ہے۔ ارب پتی صنعتکاروں کو ٹیکس ایمنسٹی سکیم دی گئی اور غریب پر بوجھ ڈالا گیا۔ حکومتی پالیسیوں کیخلاف احتجاج کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہم مہنگائی سمیت تمام اہم ایشوز پر احتجاج کرنے جارہے ہیں۔

بلاول بھٹو کا کہنا تھا تمام اپوزیشن جماعتوں کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں۔ مولانافضل الرحمان کے دھرنے کی پہلے بھی حمایت کا اعلان کر چکےہیں۔ آج بھی یہ اعلان کرتا ہوں کہ دھرنے کی بھرپورحمایت کرتے ہیں۔ مزید لائحہ عمل کیلئے اپنے نمائندے مولانا کے پاس بھیجیں گے۔

انہوں نے کہا ہم اپنے پارٹی منشور کا تحفظ چاہتے ہیں۔ ہم 18 ویں ترمیم کا تحفظ چاہتے ہیں۔ احتساب کا عمل سب کیلئےایک ہی ہونا چاہیے۔ صرف سیاسی مخالفین کا احتساب نہیں ہونا چاہیے۔

بلاول بھٹو بولے صحافتی اداروں، میڈیا کی آزادی چاہتے ہیں۔ میڈیا ٹربیونلز بنانےکی کوشش کی جارہی ہے۔ ہم اس کی مذمت کرتے ہیں۔ سیاسی جماعتوں سے جلد ملاقات کرکے تمام نکات پر گفتگو ہو گی۔

تازہ ترین ویڈیوز