بحریہ ٹاؤن کی 510 کنال 6 مرلہ اراضی پر آپریشن روکنے کی درخواست خارج

۰۸ نومبر, ۲۰۱۸ ۵:۵۱ شام

اسلام آباد (92 نیوز) اسلام آباد کی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ نے سرکاری زمین پر قبضے سے متعلق کیس کا فیصلہ سنا دیا۔ بحریہ ٹاؤن کی 510 کنال چھ مرلہ اراضی پر آپریشن روکنے کی درخواست خارج کر دی گئی۔ ساتھ ہی سی ڈی اے کو بحریہ ٹاؤن کی قبضہ کی گئی اراضی چھڑانے کی اجازت مل گئی۔

بحریہ ٹاؤن نے موضع کُری کی 510 کنال چھ مرلہ سرکاری اراضی پر قبضہ کر رکھا تھا جبکہ سی ڈی اے کی کارروائی اور آپریشن روکنے کے لیے بحریہ ٹاؤن نے مقامی عدالت سے حکم امتناع لے رکھا تھا۔

سول جج نصیر الدین نے فریقین کے وکلاء کے دلائل مکمل ہونے پر بحریہ ٹاؤن کی درخواست پر محفوظ کیا گیا فیصلہ سنایا۔

بحریہ ٹاؤن کی جانب سے بیرسٹر گوہر جبکہ کاشف ملک سی ڈی اے کی جانب سے عدالت میں پیش ہوئے۔

تازہ ترین ویڈیوز