بحریہ ٹاؤن عملدرآمد کیس ، وفاقی حکومت نے بحریہ ٹاؤن کی جمع ہونے والی رقم مانگ لی

مراد علی شاہ نااہل قرار نظرثانی درخواست اسلام آباد ‏ ‏92 نیوز وزیر اعلیٰ سندھ ‏ دوہری شہریت ‏ جسٹس عمر عطاء بندیال ‏ آرٹیکل 62 ون ایف ‏ نااہلی کی تلوار ‏ حامد خان ایڈووکیٹ ‏ الیکشن 2013 ‏ کینیڈین شہریت ‏ جسٹس عظمت سعید
۲۲ اگست, ۲۰۱۹ ۵:۲۵ شام

 اسلام آباد (92 نیوز) بحریہ ٹاؤن عملدرآمد کیس میں وفاقی حکومت نے بحریہ ٹاؤن کی جمع ہونے والی رقم مانگ لی۔

بحریہ ٹاون عملدرامد کیس کی سماعت کے دوران وفاقی حکومت نے رقوم کا تقاضہ کیا تو عدالت نے حکومت سندھ سے جواب طلب کر لیا۔

دوران سماعت جسٹس عظمت سعید نے ریمارکس دئیے کہ جو بھی فیصلہ ہو گا آئین کے مطابق ہی ہو گا۔ سندھ حکومت کا موقف سنے بغیر کوئی حکم نہیں دے سکتے۔ بحریہ ٹائون کراچی نے سات سال میں 460 ارب روپے جمع کرانے ہیں جن میں سے 25 ارب روپے 27 اگست کو دینے ہیں۔ امید ہے 27 اگست کو میری ریٹائرمنٹ کے دن رقم ادا نہ کرکے مجھے مایوس نہیں بھیجیں گے۔

ریٹائرمنٹ سے  متعلق ججز  اور بحریہ ٹاون کے وکیل اعتزاز احسن میں دلچسپ مکالمہ بھی ہوا۔ جسٹس فیصل عرب نے کہا کہ27  اگست کو ایکطرف رقم کی ادائیگی سے سپریم کورٹ کا فائدہ ہو گا تو دوسری جانب جسٹس عظمت سعید کی ریٹائرمنٹ سے نقصان بھی ہو گا۔

اعتزاز احسن نے بحریہ ٹاون مری اور راولپنڈی کا کیس اج ہی سننے کی استدعا کی تو جسٹس عظمت سعید نے ریمارکس دئیے کہ دن کم ہیں سماعت مکمل نہ ہو سکی تو سماعت بے سود رہے گی۔ ویسے بھی میں نے آرام کرنا شروع کر دیا ہے۔ کیس کی مزید سماعت عدالتی تعطیلات کے بعد ہو گی۔

تازہ ترین ویڈیوز