اپنی آبادی سے بے خبر مسلمانوں کی آبادی سے پریشان ہندو احتجاج پر اتر آئے

ہندو احتجاج ‏ نئی دہلی ‏ ‏92 نیوز بھارت ‏ مودی
۱۶ جولائی, ۲۰۱۹ ۱۰:۵۲ دن

نئی دہلی ( 92 نیوز) بھارت میں مسلمانوں کی بڑھتی آبادی سے خائف ہندو احتجاج پر اتر آئے ، اپنی بڑھتی آبادی سے بے خبر تنگ نظر ہندوؤں کو  مسلمانوں کی آبادی کھٹکنے لگی ۔

مودی کے بھارت میں ہر گزرتے دن کیساتھ نئی  بے تکی ، بونگی  بات سننے کو مل رہی ہے ، ہندو انتہا پسند پہلے مسلمانوں کو تشدد کا نشانہ بناتے نہ تھکتے ، اب  مسلمانوں کی بڑھتی آبادی کا شوشہ  چھوڑ دیا۔

انتہا پسند ہندو جنترمنتر نئی دہلی کے سامنے  جمع ہوئے اور  جلسہ سجا لیا، یہ جلسہ نہ حکومت کے خلاف تھا اور نہ ہی کسی حقوق کی جنگ کیلئےبلکہ ہندؤں کی انتہا پسندی کا شکار مسلمانوں کے خلاف تھا۔

جلسہ کرنے والی تنظیم اور بی جے پی کے ارکان پارلیمنٹ نے مسلمانوں کی بڑھتی آبادی کو ہی سازش قرار دےدیا ، عقل سے عاری مظاہرین کا کہنا تھا کہ مسلمان آبادی میں اضافہ اس لئے کررہے ہیں کہ بھارت پر قبضہ کر سکیں۔

کسی نے کہا 2029 میں اس ملک کا وزیراعظم ہندو نہیں مسلمان ہو گا، تو کوئی بولا 2050 تک ہندو اکثریت ختم ہو جائے گی۔

مسلمان کیوں ایسا کر رہے ہیں؟ جواب سن کر آپ کی بھی حیرت گم ہو جائے گی۔۔

ایک شخص تو اتنا ذہین نکلا کہ آبادی پر قابو پانے کیلئے مسلمانوں کے بنیادی حقوق چھیننے کا مطالبہ کر ڈالا۔

تازہ ترین ویڈیوز