آئی ایم ایف پروگرام کے تحت پاکستان کا پہلا جائزہ دسمبرمیں ہوگا

آئی ایم ایف پاکستان دسمبرمیں اسلام آباد ‏92 نیوز
۰۳ ستمبر, ۲۰۱۹ ۱۰:۵۰ دن

اسلام آباد( 92 نیوز)آئی ایم ایف پروگرام کے تحت پاکستان کا پہلا جائزہ دسمبرمیں ہوگا ۔ پاکستان میں مقیم آئی ایم ایف کی نمائندہ ٹریسا ڈبن نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ قرض پروگرام کے تحت پاکستان کا پہلا جائزہ دسمبرمیں ہوگا جبکہ جائزہ سہ ماہی بنیادوں پرکیاجائیگا۔

ٹریساڈبن کا کہنا تھا کہ جائزے میں پاکستان کی کارکردگی کاجائزہ لیا جائیگا اور بڑے معاشی اہداف اورمالیاتی معاملات زیرغورآ ئینگے ۔انھوں نے مزید کہا کہ فنڈ نے پاکستان کیلئے ایکسٹینڈیڈ فنڈ فیسیلٹی کے تحت 6 ارب ڈالرکاقرض پروگرام منظورکیا ہے اور پروگرام39 ماہ پرمشتمل ہے ۔

آئی ایم ایف پروگرام میں روپے کی قدر،شرح سود،سٹیٹ بینک کی خودمختاری اورنجکاری جیسی شرائط شامل ہیں،یاد رہے عالمی مالیاتی ادارے آئی ایم ایف کے مشن چیف ارنیستو راما ریز ریگو کا کہنا تھا کہ آئی ایم ایف پروگرام کا اصل مقصد پاکستانی معیشت میں توازن بحال کرنا ہے ، موجودہ حکومتی پالیسیوں میں پروگرام مددگار ثابت ہوگا۔

مشن چیف کا کہنا تھا کہ معاشی بحالی کا پروگرام دو اہم ستونوں پر مشتمل ہے ان میں پہلے نمبر پر بڑے مسائل کا حل اور دوسرے نمبر پر اداروں کی تنظیم نو شامل ہے ، معیشت کو لاحق بڑے مسائل میں اندرونی اور بیرونی ادائیگیوں کا توازن، قرضوں کی ادائیگی اور دیگر مالیاتی معاملات شامل ہیں۔

تازہ ترین ویڈیوز