امریکی بحری بیڑے پر کورونا وائرس پھیلنے کے بعد کیپٹن کو کمان سے ہٹا دیا گیا


امریکی بحری بیڑے ، کورونا وائرس ، کیپٹن ، کمان ، ہٹا
۰۳ اپریل, ۲۰۲۰ ۱۱:۰۴ دن

 واشنگٹن (92 نیوز) امریکی بحری بیڑے پر کورونا وائرس پھیلنے کے بعد کیپٹن کو کمان سے ہٹا دیا گیا۔ کیپٹن بریٹ کروزیئر نے تھیوڈور روزویلٹ پر وبا پھوٹنے سے متعلق پینٹاگون کو خط لکھا اور مدد مانگی تھی۔

سپرپاور امریکا کورونا وائرس کے سامنے بے بس نظر آنے لگا۔ ہر گزرتے دن کیساتھ  ہلاکتوں اور متاثرین کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے ۔ وائرس سے ریاست نیویارک سب سے زیادہ متاثر ہوئی ہے جہاں ڈھائی ہزار سے زائد اموات اور 93 ہزار کیسز رپورٹ ہو چکے ہیں۔ نیویارک سٹی کے میئر بِل ڈی بلاسیو نے گھر سے نکلنے والے تمام افراد کو ماسک پہننے کی ہدایت جاری کردی ۔ اُن کا کہنا تھا کہ عام شہری سرجیکل ماسک کی بجائے اپنے چہروں کو سکارف یا رومال سے ڈھانپیں کیونکہ سرجیکل ماسک کی زیادہ ضرورت ہیلتھ ورکرز کو ہے۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا دوسری بار بھی کورونا وائرس ٹیسٹ منفی آیا ہے ۔ ٹرمپ نے بتایا کہ ٹیسٹ کے عمل میں ایک منٹ لگا اور پندرہ منٹ بعد ہی نتائج سامنے آگئے ۔

دوسری جانب امریکی بحری بیڑے پر کورونا وائرس پھیلنے کے بعد کیپٹن کو کمان سے ہٹا دیا گیا۔ کیپٹن بریٹ کروزیئر نے تھیوڈور روزویلٹ پر وبا پھوٹنے سے متعلق پینٹاگون کو خط لکھا  تھا جس میں انہوں نے بیڑے سے ہزاروں اہلکاروں کو نکالنے کیلئے فوری اقدامات کرنے  کی اپیل کی تھی ۔

سیکرٹری نیوی تھامس موڈلی کا کہنا تھا کہ کپتان بریٹ کوزئیر کو خط میڈیا میں لیک کرنے کے الزام میں فارغ کیا گیا ہے۔ اب تک امریکی بحری بیڑے کے ایک سو چودہ اہلکاروں میں کورونا وائرس کی تشخیص ہو چکی ہے ۔

تازہ ترین ویڈیوز

Oops, something went wrong.