قومی اقتصادی کونسل نے آئندہ مالی سال کیلئے ریکارڈ ترقیاتی بجٹ کی منظوری دیدی

۱۹ مئی, ۲۰۱۷ ۹:۲۳ شام

اسلام آباد(92نیوز)قومی اقتصادی کونسل نے آئندہ مالی سال کیلئے ریکارڈ ترقیاتی بجٹ کی منظوری دیدی۔اجلاس میں وفاق ، صوبوں ، کشمیر اور گلگت بلتستان کیلئے اکیس کھرب تیرہ ارب روپے کے ترقیاتی بجٹ کی تجاویز منظور کی گئیں ۔

تفصیلات کےمطابق وزیراعظم نوازشریف کی زیر صدارت قومی اقتصادی کونسل کا اجلاس ہوا جس میں آئندہ مالی سال 2017.18 کے لیے سالانہ ترقیاتی بجٹ کی منظوری  دی گئی۔ ذرائع کےمطابق سالانہ ترقیاتی پروگرام کا مجموعی حجم 2100 ارب سے زائد رکھنے کی تجویزدی گئی ۔ زیادہ تر رقم جاری منصوبوں کو مکمل کرنے کے لیے مختص کی جائےگی۔ اجلاس میں وزیر اعظم آزاد کشمیر اور گورنر خیبر پختون خواہ اور چاروں وزرائے اعلی بھی شریک ہوئے۔ قومی اقتصادی کونسل کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نوازشریف کا کہناتھا کہ پاکستان کے اقتصادی اعشاریے مثبت جارہے ہیں۔ عالمی اقتصادی ادارے پاکستانی معیشت کی ترقی کو تسلی بخش قرار دے رہے ہیں ۔ اقتصادی ترقی کی شرح 5 اعشاریہ 28 فیصد ہے جو قابل اعتماد ہے ۔ پاکستان تیزی سے ترقی کرنے والی معیشتوں میں شامل ہے ۔وفاق اور صوبے مل کر ملک کی ترقی کیلئے کردار ادا  کر رہے ہیں ۔وزیراعظم کا کہناتھا کہ ہماری تمام تر توجہ توانائی کے منصوبوں پر  ہے ۔ ملک کی ترقی کو سیاست کی  نذر نہیں کرنا چاہئے چار برس کےدوران وفاق نے صوبوں کے ترقیاتی بجٹ میں ریکارڈ اضافہ کیا ہے ۔ وزیراعظم  سے چاروں وزرا اعلی نے الگ ملاقات کی ۔جس میں دورہ چین کے اہداف کے حصول کے لئے تعاون کی یقین دہانی کرائی۔

 

تازہ ترین ویڈیوز